Ballad 02 : Teri wafa

this ballad  is in lyrical form can be well chanted in the tone of this song : aye dil mujhe aisi jagah ley chal. Arzoo 1950
Written by : Mirza Sharafat Hussain Beigh
read  > Ballad 01






تیری  وفا  کہی  دفعہ  ہوئی  ہے  ثابت  بے   وفا

  تیری نگاہوں کے نشاں بھی ہوگئے ہیں اب   خفا 

آہیں میری سُن کر یہاں تڑپی ہیں  دیواریں  تیری

صد بار دوں چوکھٹ پہ تیری پیار کی تم کو صدا

ہوتا   ہے  کیا  یہی  صلا  میرے  دلِ  مجبور   کا

تیری  اداوٴں  کی جفائیں ہیں  میرے  دل  کی  دوا


Teri  wafa  kaiin    dafa    huwi    hai    sabit   bey  wafa
Teri  nighahu  ke  nishan  bhi   hogaye   hai  ab  khafa

Aahein meri sunkar yaha tadpeein hai deewarein teri
sadh baar dun chokhat pa teri pyaar ki  tumko sada

Hota  ha    kya    yehi   sila    mere   dil e majboor    ka
teri  aadavu   ki    jafayein    hai    mere   dil   ki   dawa